ملک میں قیام امن کیلئے علماء کا کردار کلیدی ہے : متحدہ علماء محاذ

کراچی : متحدہ علماء محاذ پاکستان کے چیئرمین علامہ عبدالخالق فریدی، بانی سیکریٹری جنرل مولانا محمد امین انصاری ، نائب صدور علامہ علی کرار نقوی، علامہ سید سجاد شبیر رضوی نے حالیہ فرقہ وارانہ سازشوں کے سد باب اور قیام امن کیلئے مختلف مکاتب فکر کے علماء مشائخ،دینی اداروں کے سربراہان سے ملاقاتوں میں کہا ہے کہ ملک میں قیام امن کیلئے علماء و مشائخ کا کردار ہی اصل اور کلیدی ہے، یزیدی و تکفیری و ناصبی فکر کی بیخ کی بہت ضروری ہے ۔

ملاقات کرنے والے علماء میں جماعت غرباء اہل حدیث کے نائب امیر و جامعہ ستاریہ کے سربراہ پروفیسر حافظ محمد سلفی ، جمعیت علمائے اسلام کے صوبائی رہنما جامعہ مدنیہ کے سربراہ مولانا عبدالکریم عابد، شیعہ علماء کونسل کے مرکزی رہنما علامہ ناظر عباس تقوی اور ممتاز دیوبندی عالم دین مولانا جعفر الحسن تھانوی شامل ہیں ۔

علماء نے اس بات پر اتفاق کیا کہ پاکستان اس وقت مشکل و سنگین حالات سے گزر رہا ہے عالمی سامراجی قوتیں امریکہ انڈیا اسرائیل ملک کو شیعہ سنی کی بنیاد پر تقسیم کرنا چاہتی ہیں اور پاکستان کو چھوٹی ریاستوں میں بانٹنا چاہتی ہیں ایسے حالات میں ہمیں ہر صورت ملک کی سالمیت و وحدت عوامی اتحاد و اتفاق کیلئے کردار ادا کرنا ہے ۔

مزید پڑھیں: اہلیان کراچی اور علماء کمیٹی کو سلامِ عقیدت

انہوں نے کہا سی پیک کی تعمیر سے معاشی ترقی کے دروازے کھلنے والے ہیں عوامی خوشحالی کے اس باب کو سامراج کھلنے نہیں دینا چاہتا اس لئے ہمیں اپنے اسلاف اکابر علماء کی تقلید کرتے ہوئے ملک کیلئے وہی کردار ادا کرنا ہے جو کہ تحریک پاکستان کے وقت ہمارے اکابر نے ادا کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ علماء و مشائخ کی موجودگی میں بڑی سے بڑی طاقت کا بھی ملک کو توڑنے کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہو گا ۔

علماء نے اپنے مشترکہ پیغام میں کہا کہ پرچم حسینی کے تلے ہم سب متحد اور استعماری سازشوں کیخلاف بیدار ہیں۔اصحاب رسول ؐ و اہل بیت اطہارؓ کی شان میں اہانت کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی ۔ چہلم امام حسینؓ کے موقع پر تمام مسالک کو امن و اتحاد کی فضاء قائم رکھنی چاہئے ۔ اصحاب رسول و اہل بیت اطہار کے دشمنوں و مخالفین کا اسلام و کسی مسلک سے قطعاً کوئی تعلق نہیں ہے ۔ دہشت گردی، فرقہ واریت کے خاتمے اور ملکی امن و استحکام کے لئے افواج پاکستان کا کردار قابل تحسین و ستائش ہے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *