چور دروازے سے ملک پر مسلط حکمران قبول نہیں : مولانا فضل الرحمن

نااہل سلیکٹڈ حکومت کی وجہ سے عوام کی جان و مال ، عزت وآبرو کچھ محفوظ نہیں

کوئٹہ : جمعیت علماء اسلام پاکستان کے مرکزی امیر قائد جمعیت حضرت مولانا فضل الرحمن اور سنیٹر حضرت مولانا حافظ حمد اللہ نے کہا کہ عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈال کر چور دروازے سے ملک پر مسلط حکمران قبول نہیں

ہم پہلے ہی واضح کرچکے ہیں کہ عوامی رائے کے برعکس حکومت قبول نہیں اسی لیئے نااہل سلیکٹڈ حکومت کو تسلیم کرنا گناہ کبیرہ سمجھتے ہیں الیکشن کے بجائے سلیکشن کے پالیسی کسی صورت قبول نہیں کرینگے

ان خیالات کااظہار قائد جمعیت مولانا فضل الرحمان نے اپنی رہائش گاہ پر جمعیت علماء اسلام کے سابق سنیٹر مولانا حافظ حمداللہ کی قیادت میں ایک وفد سے گفتگو کرتےہوئے کہی، اس موقع پر جماعتی امور ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال اور دیگر امور پر تفصیلی گفتگو کی گئی

مزید پڑھیں: کراچی میں‌ سیکڑوں افراد جمعیت علماء اسلام میں‌ شامل ہوگئے

انہوں نے کہا کہ نااہل حکمرانوں کی وجہ سے ملک کباڑخانہ بن چکا ہے بہتر معاشی پالیسیاں نہ ہونے کی وجہ سے ملک معاشی طور پر غیر مستحکم اور شدید مالی بحرانوں کا شکار ہیں عوام کی جان و مال سے لے کر عزت وآبرو تک کچھ بھی محفوظ نہیں

انہوں نے کہا کہ عوامی رائے کے برعکس طرز حکمرانی کا راج قبول نہیں آمریت کی آغوش میں پلنے والے ہمیں جمہوریت کا درس نہ دیں، جمہوریت کی بقا اور تسلسل کے لیے ہم نے قربانیاں دیں ہیں ہمارے اسلاف نے کبھی بھی آمریت اور آمر کے سامنے سر نہیں جھکایا

آمریت سے بغاوت اور ظلم ظالم کے خلاف صداء حق بلند کرنا ہمارے اکابر کاورثہ ہیں اس موقع پرحافظ خلیل احمد نوری حافظ سعدالدین اور دیگر بھی موجود تھے

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close