برطانوی رپورٹ گمراہ کن، پاکستان کی ساکھ خراب کرنے کی کوشش ہے، مولانا ڈاکٹر قاسم

مجلس علماء کراچی کے صدر مولانا ڈاکٹر قاسم محمود نے کہا ہے کہ برطانوی پارلیمانی گروپ کی پاکستان مخالف رپورٹ من گھڑت ہے، بیرون ملک بیٹھی قادیانی لابی ملک کو بدنام کر رہی ہے-

اپنے ایک بیان میں مولانا قاسم محمود نے کہا کہ برطانوی پارلیمانی گروپ کی رپورٹ یکطرفہ ہے اور پاکستان کی ساکھ خراب کرنے کا غیر سنجیدہ عمل ہے-

مجلس علماء کراچی کے صدر مولانا ڈاکٹر قاسم محمود نے کہا کہ برطانوی ارکان پارلیمان کے ایک گروپ کی رپورٹ جس میں پاکستان پر ریاستی سرپرستی میں قادیانیوں کے مبینہ استحصال کا الزام لگا کر پاکستان کی امداد کو امتناع قادیانیت قانون اور ختم نبوت کی ترمیم کے خاتمے کے ساتھ مشروط کرنے کی سفارش کی گئی ہے-

ان کا یہ بھی کہنا پاکستان کے داخلی معاملات میں انتہائی بھونڈی مداخلت ہے، جبکہ یہ رپورٹ لندن میں بیٹھے بھگوڑے قادیانیوں کی اپنے ہی ملک کے خلاف غداری کا شاخسانہ ہے-

انہوں نے کہا کہ ایک طرف قادیانی دستور پاکستان کی قرارِداد اقلیت کو تسلیم کرنے سے انکاری ہیں، جس کو تسلیم کرنے کے بعد انہیں دیگر غیر مسلم اقلیتوں کی طرح حقوق کی آئینی ضمانت ہے، دوسری طرف وہ ڈھٹائی کا مظاہرہ کرتے ہوئے الٹا پاکستان پر مختلف الزامات لگا کر دنیا میں پاکستان کو بدنام کرنے کی سازشوں میں مصروف ہیں۔

مولانا ڈاکٹر قاسم محمود کا کہنا تھا کہ ہم برطانوی پارلیمانی گروپ کی یکطرفہ اور گمراہ کن رپورٹ کو مسترد کرتے ہیں، برطانوی ارکان پارلیمنٹ کو پاکستان کے داخلی امور اور یہاں کے قوانین میں مین میخ نکالنے کا کوئی حق نہیں ہے-

انہوں نے کہا کہ برطانوی ارکان پارلیمنٹ کو پاکستان میں قادیانیوں پر نام نہاد ظلم کی جھوٹی کہانیاں بیان کرنے کے بجائے اپنی حکومت سے قادیانیوں کی سرپرستی ختم کرنے کا مطالبہ کرنا چاہیے، جن کی وجہ سے امت مسلمہ انتشار کا شکار ہے-

مولانا ڈاکٹر قاسم محمود نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ حکومت پاکستان برطانوی ارکان پارلیمنٹ کی اس رپورٹ کا سختی سے نوٹس لے اور پاکستان کی ساکھ خراب کرنے کی اس غیر سنجیدہ کوشش پر حکومت برطانیہ سے سرکاری سطح پر احتجاج کرے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *