سندھ حکومت کو کراچی کے کاروبار سے کوئی ہمدردری نہیں ہے : الیاس میمن

کراچی کو 5 سال کے لئے فوج کے حوالے کرکے اس کا انفرااسٹریکچر ٹھیک کیا جائے : انجمن تاجران

کراچی ( بزنس رپورٹر) آل کراچی انجمن تاجران کے سربراہ اور طارق روڈ ٹریڈرز الائنس کے صدر الیاس میمن نے کہا کہ کراچی کی تاجر برادری سراج قاسم تیلی کے ساتھ ہے۔ انہوں نے ہمیشہ کراچی کے تاجروں کے ہر جگہ سطح پر آواز اٹھائی ہے اور تاجر برادری کے لئے کسی بھی دباؤ کے بغیر ہمیشہ ساتھ کھڑے رہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز رفیق جدون , شکیل چاؤلہ , ناصر محمود , سلیم انڑ , عبدالصمد خان اور دیگر رہنماؤں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔

الیاس میمن نے کہا کہ تاجروں کے لئے کرونا کے دوران کاروباری بندش کا معاملہ ہو ,سانحہ بولٹن مارکیٹ ہو یا شیر شاہ بھتہ خوروں کی جانب سے قتل غارتگری کے نتیجے میں خوف کی صورتحال ہو سراج قاسم تیلی نے ہر معاملے میں تاجروں کے لیے آواز بلند کی بلکہ تاجروں کو اس صورتحال سے چھٹکارا دلایا

مزید پڑھیں : سرکاری ملازمین کو نجی کاروبار،ذاتی کنسلٹینسی خدمات سے روکنے کاحکم

انہوں نے کہا کہ کراچی کو فوج کے حوالے کرنے والے بیان پر تاجر برادری ان کے ساتھ ہے پیپلز پارٹی نے کراچی کو برباد کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی جو شہر پورے ملک کو چلاتا ہے اج اس شہر کا پورا نظام تباہ ہوچکا ہے انہوں نے کہاکہ کراچی کی تاجر برادری کی جانب سے 4 ماہ سے ذیادہ کاروباری سرگرمیوں کی بندش کے باوجود جب وفاقی حکومت کی جانب سے اسمارٹ لاک ڈاؤن ختم کرکے رات دس بجے تک کاروباری سرگرمیوں کو جاری رکھنے کا اعلان کیا تو سندھ حکومت اس احکامات کے باوجود رات 8بجے تک کاروبار کھولنے کا نوٹیفکیشن جاری کیا اور تاجروں کو جان بوجھ کر پریشان کیا گیا ہے

انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کے احکامات سے محسوس ہو رہا ہے کہ انہیں کراچی کے کاروبار سے کوئی ہمدردری نہیں ہے بلکہ انہیں صرف اپنی سیاست سے دلچسپی ہے انہوں نے کہا کہ کراچی کے مسائل حل کرنے میں سندھ حکومت ناکام رہی ہے جس کی وجہ سے کراچی بھر کی تاجر برادری کا مطالبہ ہے کراچی کو 5 سال کے لئے فوج کے حوالے کرکے اس کا انفرااسٹریکچر ٹھیک کیا جائے اور سندھ حکومت اور وفاقی حکومت فنڈ جاری کریں.

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close