تحفظ بنیاد اسلام بل کی مخالفت کرنے والے بیرونی طاقتوں کے آلہ کار ھیں

اسلام آباد میں تمام مکاتب فکر کے علماء کرام کی مشترکہ اہم پریس کانفرنس

اسلام آباد : گورنر پنجاب تحفظ بنیاد اسلام بل پر فی الفور دستخط کریں، پاکستان کو کسی صورت شام اور لبنان نہیں بننے دیں گے، تحفظ بنیاد اسلام بل کی مخالفت میں مقدس ہستیوں کی توہین ملک کے امن و امان کو داؤ پر لگانے کی کوشش ہے، قومی سلامتی کے ادارےریاست کی رٹ کو چیلنج کرنے والے عناصر کے خلاف کاروائی کریں، پاکستان ایک خود مختار ملک ہے، بیرونی اشاروں پر پاکستان کی سلامتی کو خطرے سے دوچار نہیں کرنے دیں گے، تحفظ بنیاد اسلام قانون سے فرقہ واریت کاخاتمہ ھوگا، بل کی مخالفت کرنے والے بیرونی طاقتوں کے آلہ کار ھیں، بل پاس ھونے کے بعد شر پسند عناصر کی طرف سے توھین آمیز اور نفرت انگیز مہم چلانے والوں کے خلاف مقتدر ادارے نوٹس لیں، پاکستان میں فرقہ واریت کی آگ نہیں پھیلنے دیں گے، پاکستان کی سلامتی عزیز ہے، لیکن ہمارے صبر کو کمزوری نہ سمجھا جائے، جمعہ تحفظ ناموس رسالت ،تحفظ ناموس صحابہ واھل بیت،تحفظ ازواج مطہرات کے طور پر منائیں گے، پنجاب اسمبلی کے تمام اراکین بالخصوص چودھری پرویز الہی,حافظ عمار یاسر اور دیگر کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں.

مزید پڑھیں : ”تحفظ بنیاد اسلام بل“ کےخلاف پراپیگنڈے سے فرقہ واریت میں اضافے کا امکان : قاری شبیر احمد عثمانی

ان خیالات کا اظہار جمعیت اہلسنت کے رہنما مولانا قاضی عبدالرشید,مولانا ظہور احمد علوی,جمعیت علمائے پاکستان کے رہنما مولانا عامر شہزاد ,حافظ مقصود احمد (رہنماء جمعیت اہلحدیث) ,مولانا نذیر فاروقی,مولانا مفتی اویس عزیز,مولانا تنویر احمد علوی، مولانا مفتی تنویر عالم,مولانا عبدالرحمن معاویہ، مولانا عبدالرزاق حیدری اور دیگر تمام مکاتب فکر کے جید علمائے کرام نے جامعہ محمدیہ میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا.

علمائے کرام نے کہا کہ مٹھی بھر لوگ تحفظ بنیاد اسلام بل کو لے کر ملک میں انتشار پھیلانا چاہتے ہیں، ملک کی غالب اکثریت کے جذبات سے کھیلنے کی کسی کو اجازت نہیں دیں گے، علمائے کرام نے کہا کہ جو لوگ اپنی کتابوں میں اہلیبیت صحابہ کرام، ازواج مطہرات اور دیگر مقدس شخصیات کی توہین کے مرتکب ہوتے ہیں وہی اس بل پر سب سے زیادہ واویلا کر رہے ہیں.

مزید پڑھیں : سینٹ میں نبی کریم ﷺ کے نام کے ساتھ خاتم النبین لکھنے کی قرار داد منظور ہونا خوش آئند ہے : مجلس تحفظ ختم نبوت

ایسے عناصر کو ہمارا مشورہ ہے کہ وہ شور مچانے کے بجائے اپنے غیر قانونی اور غیر شرعی سرگرمیوں اور افعال سے باز آجائیں، علمائے کرام نے کہا کہ گورنر پنجاب کو مٹھی بھر لوگوں کے دباؤ میں نہیں آنا چاہیے اور تحفظ بنیاد اسلام بل پر فورا دستخط کر دینے چاہئیں، یہ بل پوری قوم کے دل کی آواز ہے ہم انبیاء کرام، اہلیبیت اطہار، صحابہ کرام اور دیگر مقدس شخصیات کی عزت و ناموس پہ کوئی سمجھوتہ نہیں کر سکتے.

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close