نیب میگا کرپشن کیسز کو منطقی انجام تک پہنچانا چاہتا ہے مگر : جسٹس ر جاوید اقبال

چیئرمین نیب

اسلام آباد : قومی احتساب بیورو (نیب) جسٹس (ر) جاوید اقبال کا کہنا ہےکہ نیب وائٹ کالر کرائمز اور میگاکرپشن کیسز کو منطقی انجام تک پہنچانے کے لئے پر عزم ہے۔

جاوید اقبال نے کہا کہ بدعنوانی تمام برائیوں کی جڑ ہے، عالمی اقتصادی فورم، ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل پاکستان، پلڈاٹ اور مشال پاکستان نے بدعنوانی کے خاتمے کے لئے نیب کی کوششوں کی تعریف کی ہے۔ نیب کی کارکرگی کو مزید بہتر بنانے کے لئے آپریشن، پراسیکیوشن، ہیومن ریسورس ڈویلپمنٹ، ٹریننگ ریسرچ، آگاہی و تدارک کے شعبوں کو فعال بنایا گیا ہے۔

مذید پڑھیں : جامعہ اردو میں GRMC کا غیر قانونی اجلاس منعقد

چیئرمین نیب کا کہنا تھا کہ نیب نے بدعنوانی، منی لانڈرنگ، اختیارات کے ناجائز استعمال، لوگوں سے بڑے پیمانے پر دھوکہ دہی سے لوٹ مار، بینک فراڈ، جان بوجھ کر بینک نادہندگی اور سرکاری فنڈز میں خرد برد پر توجہ مرکوز کر رکھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیب راولپنڈی میں فرانزک سائنس لیبارٹری قائم کی گئی جس میں ڈیجیٹل فرانزک، سوالیہ دستاویزات اور فنگر پرنٹ کے تجزیئے کی سہولت ہے، نیب ملک میں انسداد بدعنوانی کا ادارہ ہے جس نے چین کے ساتھ سی پیک کے منصوبوں کے تناظر میں مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے ہیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *