سید علی گیلانی نے کل جماعتی حریت کانفرنس سے علیحدگی اختیار کرلی

90 سالہ بزرگ رہنما کافی عرصے سے علیل ہیں اور اسیری میں بیماری کے باعث کافی کمزور بھی ہوگئے ہیں۔

تحریک حریت کے بانی اور کُل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے چیئرمین شپ کے عہدے سے استعفیٰ دیدیا ہے.

کشمیر میڈیا سروس کی رپورٹ کے مطابق کُل جماعتی حریت کانفرنس کے تاحیات چیئرمین سید علی گیلانی نے آڈیو پیغام میں چیئرمین شپ سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے لیکن اس کی وجہ نہیں بتائی.

90 سالہ بزرگ رہنما کافی عرصے سے علیل ہیں اور اسیری میں بیماری کے باعث کافی کمزور بھی ہوگئے ہیں۔

اپنے آڈیو پیغام میں سید علی گیلانی کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورت کو مدنظر رکھتے ہوئے اپنے عہدے سے مستعفی ہوتا ہوں اور اس فیصلے سے حریت کانفرنس کے رہنماؤں کو مطلع کرچکا ہوں۔

جرمِ حق گوئی میں مقبوضہ کشمیر میں 30 سال میں 19 صحافی قتل

لاوہ ازیں اپنے مفصل خط میں بزرگ رہنما نے 5 اگست کے بعد قید تنہائی کے دوران حریت کانفرنس رہنماؤں کی جانب سے کوشش کے باوجود رابطہ نہ رکھنے اور آرٹیکل 370 کی منسوخی پر موثر حکمت عملی نہ بنانے کا بھی شکوہ کیا۔

سید علی گیلانی جماعت اسلامی جموں و کشمیر کے رکن بھی رہے ہیں، بعد ازاں اپنی جماعت ’’ تحریک حریت‘‘ کی بنیاد رکھی اور 1993 میں اپنی جماعت سمیت آل پارٹیز حریت کانفرنس میں شامل ہوگئے جو کشمیر کی 26 سیاسی اور سماجی جماعتوں کا اتحاد ہے۔

واضح رہے کہ جدوجہد آزادی کشمیر میں لازاول قربانیوں، انتھک جدوجہد اور سیاسی فہم و فراست کے باعث سیدعلی گیلانی کو 2003 میں کُل جماعتی حریت کانفرنس کا تاحیات چیئرمین منتخب کیا گیا تھا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close