آل سندھ پرائیویٹ اسکولز اینڈ کالج ایسوسی ایشن نے تدریس کا شیڈول جاری کردیا

15 جون سے اسکول کھولنے کی اجازت نہ دینے پر احتجاجی تحریک کا عندیہ دے دیا

آل سندھ پرائیویٹ اسکولز اینڈ کالج ایسوسی ایشن نے ایس او پیز کے ساتھ اپنے تدریسی عمل کا شیڈول جاری کر دیا ۔ تین دن پرائمری اور تین سکینڈری جماعتوں کا تدریسی سرگرمیاں ہونگی ۔ بورڈ امتحانات نہ ہونے کی صورت میں طلبہ کو نمبرز دینے اختیار اسکولوں کو دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے 15 جون سے اسکول کھولنے کی اجازت نہ دینے پر احتجاجی تحریک کا عندیہ دے دیا ۔

جمعہ کو آل سندھ پرائیویٹ اسکولز اینڈ کالج ایسوسی ایشن کا ڈسٹرکٹ ویسٹ کے علاقے بلدیہ ٹاون میں دی گریسفل گرامر ہائر سیکنڈری اسکول میں اجلاس منعقد کیا گیا ، جس کی صدارت ایسوسی ایشن کے ڈسٹرکٹ صدر خان محمد اور کریسنٹ گروپ آف اسکولز کے سرپرستِ اعلیٰ ملک عبدالغفور اعوان نے کی ۔

مذید پڑھیں : سیاحت کا شعبہ کھولنے سے متعلق ضوابط اور احتیاطی تدابیر کا مسودہ تیار

اجلاس میں میں علاقے کے 70 سے زائد اسکول مالکان نے شرکت کی۔ تمام پرنسپلز کی مشترکہ رائے سے اعلامیہ جاری کیا گیا جس کے مطابق ہفتے میں کلاسوں کا انعقاد دو حصوں میں کیا جائے گا۔ کلاس اول تا پنجم کے طلبہ و طالبات کو شروع کے تین دن اور ششم تا دہم کے طلبہ و طالبات کو آخری کے تین دن بلایا جائے گا ۔

تمام طلبہ و طالبات کے لیے ماسک کے استعمال کو لازمی قرار دیا جائے گا۔ اسکول مالکان اور پرنسپلز اپنے اسکولز میں سینیٹائزر، تھرما میٹر اور اسکول کے عملے کے لیے بھی ماسک پہننا لازمی قرار دیا جائے گا۔ ایک کلاس میں دس سے زائد طلبہ کو نہیں بٹھایا جائے گا ۔ وین ڈرائیورز کو بھی انتباہ کیا جائے گا کہ وہ بھی جاری کردہ ایس او پیز پر عمل درآمد کریں ۔

مذید پڑھیں : سندھ پولیس میں پھر سازشیں

تمام اسکولز مالکان اور پرنسپلز فوری طور پر ایس او پیز کے تحت والدین سے ملاقات کریں اور انکو بچوں کے تعلیمی نقصان سے آگاہ کریں۔ تمام پرنسپلز اور اسکول مالکان اس بات سے متفق ہیں کہ بورڈنے جو پروموشن پالیسی جاری کی ہے اس فیصلے کو کورٹ میں لے جانے پر متفق ہیں ۔

اور بورڈ سے مطالبہ کیا ہے کہ کہ اگر بورڈ امتحانات نہیں لے سکتا تو طلبہ کو نمبرز دینے کا اختیار اسکولز کو دیا جائے۔ اگر حکومت اسکولز مالکان کو ایس او پیز کے تحت اسکول کھولنے کی اجازت نہیں دیتی تو تمام اسکول مالکان اور پرنسپلز اس فیصلے پر متفق ہیں کہ 15 جون سے احتجاجی تحریک کا آغاز کریں گے۔

Show More

اختر شیخ

اختر شیخ (بیورو چیف کراچی) جن کی صحافتی جدوجہد 3 دہائیوں پر مشتمل ہے، آپ الرٹ نیوز سے منسلک ہونے سے قبل آغاز نیوز ٹائم، روزنامہ مشرق، روزنامہ بشارت اور نیوز ایجنسی این این آئی کے ساتھ مختلف عہدوں پر کام کیا ہے۔ اختر شیخ کراچی پریس کلب کے ممبر ہیں اور کے یو جے (برنا) کی بی ڈی ایم کے ممبر بھی ہی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close