نوشہرہ: خواتین کو بھتے کے پیغامات بھیجنے والا پولیس اہلکار گرفتار

نوشہرہ پولیس نے خواتین کو موبائل فون اور سوشل میڈیا پر غلیظ گالیاں دینے اور بھتہ خوری کے پیغامات بھیجنے والے پولیس اہلکار کو گرفتار کر لیا۔

پولیس کے مطابق حکمران جماعت تحریک انصاف کی خاتون رکن صوبائی اسمبلی مس سومی فلک نیاز، ان کے شوہر سمیت ضلع نوشہرہ کے درجنوں خواتین کو موبائل فون اور سوشل میڈیا پر غلیظ گالیاں دینے کے ساتھ ساتھ بھتہ خوری کے پیغامات بھیجنے میں ملوث تھے.

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نوشہرہ نے ملزم کو کوارٹر گارڈ میں بند کرکے ان کے خلاف محکمانہ انکوائری شروع کردی۔

مزید پڑھیے: پولیس نے “کرنل کی بیوی” کے خلاف مقدمہ درج کرلیا

تفصیلات کے مطابق نوشہرہ سے تعلق رکھنے والی حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والی ممبر صوبائی اسمبلی نے پبی پولیس کو رپورٹ درج کروائی کہ سوشل میڈیا پر ایک جعلی فیس بل آئی ڈی کے ذریعے ان کو حراساں کیا جارہا ہے، اور شوہر فلک نیاز کو بھتہ دینے کے لئے پرچیاں بھیجی جارہی ہے۔

اس درخواست پر کارروائی کرتے ہوئے نوشہرہ سی ٹی ڈی پولیس کے ڈی ایس پی اسماعیل خان نے انکوائری شروع کی اور جدید طریقہ تفتیش کے ذریعے جعلی فیس بک آئی ڈی تک رسائی حاصل کی جو نوشہرہ پولیس اہلکار محمد عارف بیلٹ نمبر 1715 استعمال کر رہا تھا۔

نوشہرہ پولیس اور سی ٹی ڈی اہلکاروں نے گذشتہ روز مذکورہ آئی ڈی کے ایڈمن کو گرفتار کرلیا۔

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نوشہرہ کاشف ذوالفقار نے مذکورہ اسپیشل پولیس فورس کے اہلکار محمد عارف کو کوارٹر گارڈ میں بند کرکے ان کے خلاف محکمانہ کاروائی شروع کی۔

مزید پڑھیے: ہری پورDIG ہزارہ کی ہدایت پر سٹی پولیس نے 7 کلو ہیروئن سمیت 3 منشیات فروش گرفتار کر لئے

ابتدائی تحقیقات میں انکشاف ہوا ہے کہ مذکورہ پولیس اہلکار نوشہرہ سے تعلق رکھنے والی دیگر خواتین کو بھی سوشل میڈیا اور موبائل فون پر ہراساں کرتا تھا۔

ممبر صوبائی اسمبلی مس سومی فلک نیاز اور ان کے شوہر فلک نیاز نے بین الاقوامی گلوبل ٹائمز میڈیا یورپ کے ساتھ ایک اخباری بیان میں کہا کہ مذکورہ جعلی فیس بل آئی سے گذشتہ تین ماہ سے ان کو پریشان کیا جارہا تھا اور ان کے بچوں کو اغواء کرنے اور ان کو ٹارگٹ کلنگ کے ذریعے نشانہ بنانے کی دھمکیاں دی جارہی تھیں جبکہ ان کو دس لاکھ بھتے کی پرچی بھی بھیجی گئی تھی۔ جس کی وجہ سے وہ انتہائی پریشان تھے۔

مگر انہوں نے نوشہرہ پولیس اور سی ٹی ڈی پولیس کے انتہائی اہم پیشرفت پر ان کا شکریہ ادا کیا اور ان کی اس کاروائی پر ان کو خراج تحسین پیش کیا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *