تحریک انصاف کے رہنما فہیم خان نے واٹر بورڈ کی بلک لائن کا والوو زبردستی چلا دیا

پاکستان تحریک انصاف کے ممبر قومی اسمبلی فہیم خان ، کورنگی کے صدر گوہر خٹک سمیت کارکنان نے رات ڈھائی بجے واٹر بورڈ‌ کے والو آپریشن سسٹم کو ہائی جیک کر لیا ۔

تحریک انصاف کے رہنما و کورنگی سے منتخب ایم این اے فہیم خان 7 مئی کی رات کو 2 بج کر 27 منٹ پر کورنگی ساڑھے 5 نمبر واٹر بورڈ بلک لائن کے والو پر پہنچے جہاں ان کے ہمراہ لگ بھگ 15 سے 20 کارکنان تھے ۔ فہیم خان نے واٹر بورڈ کے کسی ذمہ دار کے بجائے واٹر بورڈ کے نچلے اسکیل کے معمولی ملازم ششمار انور کے گھر کارکنان کو بھیج کر اسے والو کی جگہ پر لایا ۔ جہاں والو مین کو کہا گیا کہ وہ والو کی چابیاں دے ۔ یہ گوہر خٹک وہی ہے جس نے ماضی میں ڈپٹی کمشنر کورنگی قرۃ العین کے دور میں دفتر پر چڑھائی کی تھی ۔

مذید پڑھیں : شارجہ میں آتشزدگی، اہم پاکستانی شخصیت متاثر

شمشاد انور کورنگی نمبر 5 میں واٹر بورڈ کی دھابیجی اور گھاروں سے آنے والی 48 انچ قطر کی بلک لائن کے والو آپریٹر ہیں ۔ جن کے ساتھ دوسرا والو مین توفین اس جگہ ڈیوٹی کرتا ہے جو اس وقت اپنے گھر پر تھا ۔ پی ٹی آئی کے کارکنان اور فہیم خان نے شمشاد انور سے کہا کہ توفیق کو بھی موقع پر بلائے بصورت دیگر اس کو یہیں پر رکھا جائے گا ۔ تاہم توفیق نے رابطہ کرنے آنے سے انکار کردیا تھا ۔

جس کے بعد شمشاد انور سے چابیاں لیکر فہیم خان نے کارکنان کی مدد سے واٹر بورڈ کے حساس بلک کو خود آپریٹ کر کے ڈی ایچ اے کو جانے والا پانی بند کردیا اور پانی کا رخ کورنگی ساڑھے پانچ کے علاقوں کے علاوہ ناصر جمپ ، بٹھائی کالونی اور کوسر گارڈ کی جانب کردیا جس کی وجہ سے ڈی ایچ اے ، قیوم آباد ، کمشیر کالونی ،اختر کالونی کی جانب جانے والا پانی معطل ہو گیا ۔

مذید پڑھیں : طاہر القادری اور الیاس قادری کو قتل کرانے کی سازش کرنے والا مذہبی اسکالر گرفتار

بلک لائن کا عملہ اس وقت کوئی بھی موجود نہیں تھا جب کہ علاقے کی سپلائی لائنوں کے سپر وائزر مقصود بھی موقع پر موجود تھے ۔جنہوں نے اپنے سییئر افسران کو اس کی اطلاع دی ۔ اس بلک لائن کا ایکسین عمران عبداللہ ،اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجنیئر یعقوب لاکھو بھی موقع پر موجود نہیں تھے ۔ تاہم واٹر بورڈ اسکیل 2 کا ملازم اور ایم کیو ایم کا دیرینہ کارکن شاکر عرف فٹر فہیم خان کو گائیڈ کررہا تھا جبکہ شاکر کی ڈیوٹی اس لائن کی نہیں ہے ۔اس کے علاوہ سب انجنیئر اصلاح بھی فہیم خان کے ہمراہ اپنی ہی لائن پر غیر قانونی کام کرا رہا تھا ۔

شاکر فٹر واٹر بورڈ کا اسکیل 2 کا ملازم ہے تاہم ارب پتی ہونے کی وجہ سے یہ گزشتہ کئی برس کورنگی میں تعینات ہے جس کا تبادلہ سابق ایم ڈی واٹر بورڈ ہاشم رضا زیدی نے بلدیہ ٹائون مین کیا تھا جس نے ایک دن بھی بلدیہ ٹائون میں ڈیوٹی نہیں کی ہے اور اس کا تبادلہ آج تک اس علاقے سے کوئی نہیں کرسکا ہے ۔کورنگی میں سرکاری پانی بیچنے کی وجہ سے ماہانہ 40 لاکھ روپے آمدنی ہے ۔

مذید پڑھیں : واٹر بورڈ MQM کا نظریاتی کارکن عمران عبداللہ امیر ترین افسران کی لسٹ میں آگیا

فہیم خان نے کورنگی کے پی ٹی آئی کارکنان کی ذمہ داری اس والو پر لگا دی ہے کہ وہ اپنی مرضی سے والو آپریٹ کرایا کریں ۔ اس کے لئے اصل ذمہ داری ضلع کورنگی کے صدر گوہر علی خٹک ، جنرل سیکٹری ساجد حسین میمن ، کورنگی ٹائون کے جنرل سیکٹری وسیم وارث اور یو سی 32 کے چئیرمین عبدالرحمن کو بھی لُک آفٹر کا کہا گیا ہے ۔ معلوم رہے کہ اس بلک لائن سے دوسری برانچ اولڈ لائن سے پانی کی فراہمی کے مطابق کورنگی ڈھائی ، چکرا گوٹھ ، ناصر جمپ ، ضیا کالونی تک صبح 11 سے شام بجے اور ڈی ایچ اے ،اختر کالونی سمیت دیگر علاقوں کو چائنہ لائن سے فراہمی بھی 11 سے شام 5 بجے تک ہوتی ہے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *