اختر مینگل کا رشتہ داروں کی زمینوں پر قبضہ

for feature image

خضدار (الرٹ نیوز): بلوچستان عوامی پارٹی (بی این پی) مینگل کےسربراہ سردار اختر مینگل اپنے رشتہ داروں کی زمینوں پر قبضہ کرکے انہیں قتل کرنے کی دھمکیاں دینے لگے ہیں.

سردار اخترمینگل کے چچازاد امام بخش عرف عمران مینگل اور ان کی زوجہ سوشل ایکٹوسٹ ہمارٸیسانی نے خضدار پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوٸے کہا ہے کہ سرداراخترمینگل ان کی زمین ودیگر جاٸیداد پر قبضہ جماکر ان کو قتل کی دھمکیاں دے رہا ہے۔

عمران مینگل کا الزام عاٸد کرتے ہوٸے کہنا تھا کہ سردار اختر مینگل دس سے بارہ مسلح افراد تیار کرکے ان کی بیوی ہما رٸیسانی کو قتل کرنے کا ٹاسک دے چکے ہیں.

for feature image
عمران مینگل اپنی اہلیہ ہما رئیسانی کے ہمراہ خضدار پریس کلب میں پریس کانفرنس کر رہےہیں۔

انہوں نے کہا کہ جاوید مینگل اور کالعدم لشکر بلوچستان کے تعاون سے ہمیں قتل کرنے کے لیے لسبیلہ میں بندے بیٹھاٸے گٸے ہیں۔

عمران مینگل کا کہنا تھا کہ قلات میں ہماری چار ہزار ایکٹر زمین پر علی اکبرمینگل کے بیٹے سوراب مینگل کو بیٹھا کر قبضہ کیا جا چکا ہے جبکہ کراچی میں ہمارے والد کے مکان پر جہانزیب مینگل اور اورنگزیب مینگل کو بیٹھایا گیا ہے.

اس نے انکشاف کیا کہ سرداراختر مینگل نے ان کے والد سردار مہر اللہ خان مینگل کو کراچی میں پرغمال بنایا ہوا ہے، جبکہ دو سال سے ہمیں ان سے ملنے بھی نہیں دیا جارہا۔

عمران مینگل کا کہنا تھا کہ ہماری معدنیات کے روٸیلٹی نوروز مینگل وصول کرکے سردار اختر مینگل کو بھیج رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان کے والد سردار مہر اللہ مینگل نے تمام جاٸیدادیں اور مکان میرے نام پر کیا ہوا ان کے تمام ترثبوت میرے پاس موجود ہے لیکن اس کے باوجود سردار اختر مینگل ان کی زمین اور جاٸیداد پر ناجاٸز قبضہ جماکر اب انہیں قتل کرنے کے درپے ہے۔

انہوں نے بلوچستان حکومت، وزیراعظم پاکستان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے اپیل کی کہ انہیں تحفظ فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ انصاف بھی فراہم کیا جائے.

واضح رہے کہ عمران مینگل کی اہلیہ ہما رٸیسانی بلوچستان کی معروف سوشل ایکٹوسٹ ہے، اور بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) کا حصہ بھی ہیں.

ان کی بھی جدی اور پدری میراث پر سردار اخترمینگل نے قبضہ کیا ہوا ہے اور کراچی میں ان کا ایک بنگلہ ہے اب اس پر بھی اختر مینگل نے اپنا بندہ بیٹھا کر قبضہ کیا ہوا ہے.

خیال رہے کہ اپنی زمین اور معدنیات کی راٸیٹلی لینے کے لیے جدوجہد کرنے پر اخترمینگل کی طرف سے انہیں‌ دو دن قبل قتل کی دھمکی ملی جو اخترمینگل کے کارندے نے کال پر دی جس کی کال بھی ریکارڈ کی گئی تھی.

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *