ہالینڈ میں ہونے والے گستاخانہ خاکوں کے مقابلے کو منسوخ کردیا گیا۔

عالمی نشریاتی ادارے اے پی نے ٹوئٹ کیاہے کہ ہالینڈ نے گستاخانہ خاکے منسوخ کرنے کا فیصلہ کرلیاہے،ہالینڈ کے اسلام مخالف رکن اسمبلی گیئرٹ ولڈرز نے مقابلہ منسوخ کرنے کا فیصلہ خود کیا ہے اور انہوں نے اپنے ایک پیغام میں کہا ہے کہ وہ یہ مقابلہ منسوخی کا فیصلہ پاکستان میں ہونے والے مظاہروں کے بعد کررہے ہیں ۔ گیئرٹ ولڈرز نے ایک بیان میں کہا کہ انہوں نے فیصلہ کیا ہے کہ خاکوں کا مقابلہ نہ کروایا جائے۔
واضح رہے کہ یہ فیصلہ ایسے وقت میں کیا گیا ہے کہ جب پاکستان میں اس وقت سب سے سخت موقف رکھنے والی دینی جماعت تحریک لبیک پاکستان کی جانب سے لاہور سے اسلام آباد کی جانب احتجاجی مارچ کیا جارہا ہے اور ممکنہ طور پر احتجاجی مارچ ہالینڈ کی ایمبیسی کے سامنے جانا تھا یا انتظامہ کی رکاوٹ کے باعث احتجاج مارچ قومی اسمبلی و ڈی چوک کی جانب جانا تھا تاہم احتجاجی مارچ اسلام آباد منرل مقصود تک پہنچنے سے قبل ہی ہالینڈ کی جانب سے یہ فیصلہ کیا گیا ہے ۔
راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ہالینڈ کے پاکستان میں سفیر نے بتایا کہ گستاخانہ خاکوں کا مقابلہ ترک کردیا گیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہالینڈ میں گستاخانہ خاکوں سے مسلمانوں میں اضطراب پیدا ہوا، ہم نے ڈچ وزیر خارجہ سے پاکستانی عوام کے جذبات کا اظہار کیا۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ تحریک لبیک نے گستاخانہ خاکوں پر اپنا احتجاج ریکارڈ کرایا، اللہ کا کرم ہوگیا کہ معاملہ ٹل گیا اب درخواست ہے کہ احتجاجی قافلہ پر امن طور پرمنشتر ہوجائے۔بعدازاں تحریک لبیک پاکستان نے اسلام آباد میں ریلی ختم کرنےکا اعلان کردیا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *