رمضان میں بھی مسجد الحرام، مسجد النبوی میں‌ نماز، تراویح پر پابندی عائد

Makkah and Medina

کورونا وائرس کے باعث سعودی حکومت نے رمضان المبارک کے مہینے میں‌ مسجد الحرام اور مسجد نبوی میں نماز کی ادائیگی اور اعتکاف پر پابندی عائد کردی.

سعودی گیزٹ کی رپورٹ کے مطابق اس حوالے سے صدر جنرل الحرمین الشرفین عبدالرحمٰن السدیس کا کنہا ہے کہ مذکورہ فیصلہ نمازیوں‌ اور عمرہ زائرین کی حفاظت کے لیے کیا گیا ہے.

واضح رہے کہ سعودی عرب میں کورونا وائرس کے کیسز میں اضافے کے بعد ملک بھر میں‌ تا حکم ثانی لاک ڈاؤن کردیا گیا ہے.

اس کے ساتھ ساتھ مسجد الحرام اور مسجد النبوی میں پہلے ہی نماز کی ادائیگی پر پابندی عائد ہے، تاہم امکان ظاہر کیا جارہا تھا یہ پابندی رمضان المبارک میں بھی برقرار رہ سکتی ہے.

ڈاکٹر عبدالرحمٰن بن عبد العز السدیس نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ مکہ مکرمہ میں مسجد الحرام اور مسجد النبوی اذان باقاعدگی سے دی جائے گی لیکن یہ مساجد نمازیوں کے لیے بند رہیں گی.

انہوں نے بتایا کہ مسجد الحرام اور مسجد النبوی میں فرض نماز کے ساتھ ساتھ عام شہریوں پر تراویح، سحر و افطار پر بھی پابندی ہوگی.

ان دونوں مساجد میں‌ منتظمین ہی پانچ وقت نماز ادا کریں گے، اور تراویح بھی پڑھیں گے، جبکہ تراویح کی 20 رکعت کو کم کرکے 10 کردیا گیا ہے.

واضح رہے کہ رمضان المبارک کے مہینے میں‌ دنیا بھر سے مسلمانوں کی بڑی تعداد حرم شریف اور روضہ رسول کا رخ کرتی ہے اور بالخصوص آخری 10 ایام میں‌ ایک لاکھ سے زائد لوگ مسجد الحرام میں اعتکاف کرتے ہیں.

تاہم اس سال کورونا وائرس کی وبا کی وجہ سے حکومتی پابندی کے باعث مسجد میں‌ صرف منتظمین ہی نماز و تراویح ادا کریں گے.

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *